مسواک رب کی خوشنودی کا باعث ہے

تحریر : ابو ضیاد محمود احمد غضنفر حفظ اللہ عن عائشة الله عن النبى ما قال: ( (السواك مطهرة للفم مرضاة للرب )) [أخرجه النسائي، وابن حبان فى صحيحه وأخرجه ابن خزيمة بطريق أخرى فى صحيحه، والحاكم فى المستدرك] سیدہ عائشہ رضی اللہ عنہا نے نبی کریم صلی اللہ علیہ وسلم سے روایت کیا آپ نے ارشاد فرمایا: ”مسواک منہ کی پاکیزگی اور رب کی خوشنودی کا باعث ہے ۔“ امام نسائی رحمہ اللہ نے اسے نقل کیا ہے اور ابن حبان نے اپنی صحیح میں بیان کیا اور ابن خزیمہ نے ایک دوسری سند سے اپنی صیح میں بیان کیا اور حاکم نے مستدرک میں ۔ تحقیق و تخریج: یہ حدیث صحیح ہے۔ مسند امام احمد: 2/ 47 26 124 238 ، نسائی: 1/ 10 ابن حبان: 143 ابن خزیمه: 135 ، الدارمی: 290 البیهقی: 1/ 34 بخاری: 87/4 وأخرج (۱) مسلم…

Continue Readingمسواک رب کی خوشنودی کا باعث ہے

مساجد میں تراویح چار رکعتوں کو ایک سلام کے ساتھ پڑھنا کیسا ہے؟

سوال : بعض ائمۂ مساجد صلاۃِ تراویح میں چار یا اس سے زائد رکعتوں کو ایک سلام کے ساتھ پڑھتے ہیں اور دو رکعتوں پر بیٹھتے نہیں ہیں، اور دعویٰ کرتے ہیں کہ یہ سنت نبوی سے ثابت ہے۔ کیا ہماری شریعت مطہرہ میں اس عمل کی کوئی اصل ہے ؟ جواب : یہ عمل غیر مشروع بلکہ مکروہ یا اکثر اہلِ علم کے نزدیک حرام ہے۔ کیونکہ نبی صلی اللہ علیہ وسلم نے فرمایا ہے : صلاة الليل مثنيٰ مثنيٰ . [صحيح: صحيح بخاري، الصلاة 8 باب الحلق والجلوس فى المسجد 84 رقم472، 473 والوتر 14 باب ماجا ء فى الوتر 1 رقم 990. 993 وباب ساعات الوتر 2 رقم 995 والتهجد 19 باب كيف صلاة النبى صلى الله عليه وسلم 10 رقم 1137، صحيح مسلم، صلاة المسافرين وقصرها 6 باب صلاة الليل مثنيٰ مثنيٰ ...... 20 رقم 145، 146، 147، 148،…

Continue Readingمساجد میں تراویح چار رکعتوں کو ایک سلام کے ساتھ پڑھنا کیسا ہے؟

امام سے پہل کرنا

تحریر: الشیخ مبشر احمد ربانی حفظ اللہ امام سے پہل کرنا سوال : نماز میں امام سے پہل کرنے والے کا کیاحکم ہے ؟ جواب : امیر کی اطاعت تو مدت ہوئی مسلمانوں سے چھن چکی۔ نہ ان کا کوئی امیر المؤمنین ہے جس کی اطاعت کو وہ اللہ اور اس کے رسول صلی اللہ علیہ وسلم کی اطاعت اور اس کی نافرمانی کو اللہ اور اس کے رسول صلی اللہ علیہ وسلم کی نافرمانی سمجھیں، نہ انہیں اسے حاصل کرنے کی کوئی فکر ہے ( الا ماشاء اللہ)، لے دے کر نماز کے امام کی صورت میں انہیں پانچ وقت اطاعت کا سبق یاد کرایا جاتا ہے اور ان سے دنیا کے تمام کام چھڑوا کر اور ہر طرف سے توجہ ہٹا کر امام کی اقتدا میں اللہ تعالیٰ کے سامنے کھڑا کر دیا جاتا ہے کہ اب تمہاری ہر حرکت امام…

Continue Readingامام سے پہل کرنا

امام کی اقتدا کا صحیح طریقہ

تحریر: الشیخ مبشر احمد ربانی حفظ اللہ امام کی اقتدا کا صحیح طریقہ سوال : مقتدی کے لیے امام کی اقتدا کا صحیح طریقہ سنت رسول کی روشنی میں بیان فرما دیں ؟ جواب : حضرت ابوہریرہ رضی اللہ عنہ سے روایت ہے کہ رسول اللہ صلی اللہ علیہ وسلم نے فرمایا : لَا تُبَادِرُوا الإِمَامَ، إِذَا كَبَّرَ فَكَبِّرُوا، وَإِذَا قَالَ: وَلا الضَّالِّينَ سورة الفاتحة آية 7، فَقُولُوا: آمِينَ، وَإِذَا رَكَعَ فَارْكَعُوا، وَإِذَا قَالَ: سَمِعَ اللَّهُ لِمَنْ حَمِدَهُ، فَقُولُوا: اللَّهُمَّ رَبَّنَا لَكَ الْحَمْدُ [مسلم، كتاب الصلاة : باب النهي عن مبادرة الإمام بالتكبير وغيره 415] ”امام سے جلدی نہ کرو، جب وہ تکبیر کہے تو تم تکبیر کہو، جب وہ وَلَا الضَّآلِّيْنَ کہے تو آمین کہو۔ جب رکوع کرے تو تم رکوع کرو، جب سَمِعَ اللهُ لِمَنْ حَمِدَهُ کہے تو تم اَللّٰهُمَّ رَبَّنَا لَكَ الْحَمْدُ کہو۔“ ایک اور روایت میں یہ الفاظ ہیں…

Continue Readingامام کی اقتدا کا صحیح طریقہ

کیا غیر ذمہ دار شخص امامت کے لائق ہے ؟

تحریر: الشیخ مبشر احمد ربانی حفظ اللہ کیا غیر ذمہ دار شخص امامت کے لائق ہے ؟ سوال :جو شخص کسی ہمسایہ کے گھر میں تانک جھانک کرے، کیا وہ امامت کرانے کا اہل ہے یا نہیں ؟ قرآن و حدیث کی روشنی میں وضاحت فرمائیں۔ جواب : بشرط صحت سوال ایسا امام جو کسی کے گھر میں تانک جھانک کرے اسے امامت کا حق نہیں ہے۔ امام اعلیٰ صفات کا مالک ہونا چاہیے، جیسا کہ سنن الدارقطنی میں حدیث ہے کہ اپنے میں سے بہتر کو امام بناؤ اور ناجائز تانک جھانک شرعاً حرام ہے اور فعل حرام کا ارتکاب بالخصوص امام کے لیے تو قطعاً درست نہیں اور ایسا امام تو مقتدیوں کی نظر میں بھی مقام کھو دیتا ہے اور مقتدی اس سے کراہت کرنے لگ جاتے ہیں، اس کے متعلق یہ حدیث پیش نظر رہے کہ عبداللہ بن عباس…

Continue Readingکیا غیر ذمہ دار شخص امامت کے لائق ہے ؟

داڑھی کٹوانے والے کو مستقل امام بنانا

تحریر: الشیخ مبشر احمد ربانی حفظ اللہ داڑھی کٹوانے والے کو مستقل امام بنانا سوال : ہماری مسجد کے امام صاحب اپنی داڑھی کو کٹواتے ہیں اور ان کی داڑھی ایک مٹھی سے بھی کم ہے، کیا ایسے شخص کے پیچھے نماز ادا کرنا جائز ہے یا نہیں اور ایسے شخص کو امام بنانا کیسا ہے ؟ جواب : امام مسجد ایسا ہونا چاہئے جو شریعت کی صحیح طور پر پیروی کر نے والا ہو اور کتاب و سنت کے مطابق زندگی بسر کرنے والا ہو اور سب سے زیادہ قرآن و سنت کا عالم ہو۔ داڑھی رکھنا مسلمان مرد پر واجب ہے، اللہ کے رسول صلی اللہ علیہ وسلم نے داڑھی بڑھانے کا حکم دیا ہے جیسا کہ فرمایا : خالفوا المشركين وفروا اللحي وأحفوا الشوارب . . . وفي رواية . . . انهكوا الشوارب و اعفوا اللحي [بخاري، كتاب اللباس…

Continue Readingداڑھی کٹوانے والے کو مستقل امام بنانا

سبحان الله وبحمدهٖ سبحان الله العظيم

تحریر : فضیلۃ الشیخ حافظ عبدالستار الحماد حفظ اللہ سبحان الله وبحمدهٖ سبحان الله العظيم كَلِمَتَانِ حَبِيبَتَانِ إِلَى الرَّحْمَنِ، خَفِيفَتَانِ عَلَى اللِّسَانِ، ثَقِيلَتَانِ فِي الْمِيزَانِ سُبْحَانَ اللَّهِ وَبِحَمْدِهِ، سُبْحَانَ اللَّهِ الْعَظِيمِ [صحيح بخاري، 7563] ”دو کلمات ایسے ہیں جو رحمن کو بہت پسند، زبان پر پڑھنے میں ہلکے لیکن ترازو میں انتہائی وزنی وہ یہ ہیں” سُبْحَانَ اللَّهِ وَبِحَمْدِهِ، سُبْحَانَ اللَّهِ الْعَظِيم“۔ فوائد: ِقیامت کے دن اللہ تعالی کے نام ’ کلمات ذکر‘ تلاوت قرآن کا وزن ہوگا۔ اسی طرح نماز، ایمان، اللہ کے خوف اور اس کی محبت کا بھی وزن ہوگا۔ ترازو میں مذکورہ دو کلمے بہت وزنی ہوں گے کیونکہ ان کلمات میں اللہ کی عظمت و شان اور اسے ہر عیب سے پاک ہونے کا بیان کیا گیا ہے۔ حضرت جویریہ رضی اللہ تعالی عنہا بیان کرتی ہیں ایک دن رسول اللہ صلی اللہ علیہ وسلم نماز فجر پڑھنے…

Continue Readingسبحان الله وبحمدهٖ سبحان الله العظيم

سُبْحَانَ اللَّهِ وَبِحَمْدِهِ کی فضیلت

تحریر : فضیلۃ الشیخ حافظ عبدالستار الحماد حفظ اللہ سُبْحَانَ اللَّهِ وَبِحَمْدِهِ کی فضیلت مَنْ قَالَ سُبْحَانَ اللَّهِ وَبِحَمْدِهِ‏.‏ فِي يَوْمٍ مِائَةَ مَرَّةٍ حُطَّتْ خَطَايَاهُ، وَإِنْ كَانَتْ مِثْلَ زَبَدِ الْبَحْرِ [ صحيح بخاري، 6405‏]”جو شخص دن میں سو مرتبہ سبحان اللہ وبحمدہٖ پڑھتا ہے اس کے گناہ معاف کر دیے جاتے ہیں خواہ سمندر کی جھاگ جتنے ہوں“۔ فوائد: اللہ تعالی کو ہر نقص سے پاک قرار دینا جو اس کے شایانِ شان نہ ہو ا تسبیح کہلاتا ہے اس سے شریک، بیوی اور اولاد کی نفی خود بخود لازم آتی ہے۔ بعض تسبیح سے مراد اللہ کا ذکر اور نفل نماز بھی ہوتی ہے۔ نمازِ تسبیح کی وجہ بھی یہی ہے کہ اس میں تسبیحات بکثرت پڑھی جاتی ہیں۔ [فتح الباري، 11/247] واضح رہے کہ ”سبحان اللہ وبحمدہٖ“ کہنے سے وہ گناہ معاف ہوتے ہیں جن کا تعلق حقوق اللہ سے ہے…

Continue Readingسُبْحَانَ اللَّهِ وَبِحَمْدِهِ کی فضیلت

پسندیدہ کلمات

  تحریر : فضیلۃ الشیخ حافظ عبدالستار الحماد حفظ اللہ أَحَبُّ الْكَلاَمِ إِلَى اللَّهِ أَرْبَعٌ سُبْحَانَ اللَّهِ وَالْحَمْدُ لِلَّهِ وَلاَ إِلَهَ إِلاَّ اللَّهُ وَاللَّهُ أَكْبَرُ ‏” تمام کلمات سے بہتر چار کلمے ہیں سبحان اللہ، الحمدللہ، لا الہ الا اللہ اور اللہ اکبر۔“ [صحيح مسلم، 2137] فوائد: رسول اللہ صلی اللہ علیہ وسلم نے جو کلمات ذکر تلقین فرمائے ہیں ان کے معنوی اعتبار مندرجہ ذیل چار اقسام ہیں۔ ➊ ان میں اللہ تعالیٰ تنریہ تقدیس ہے۔ یعنی اللہ تعالیٰ ہر اس بات سے پاک ہے جس میں عیب یا نقص کا شائبہ ہو ”سبحان للہ “ کا یہی مدعا ہے۔ ➋ ان میں اللہ تعالیٰ کی حمد و ثنا ہے یعنی تمام خوبیاں اور تمام صفات کمال اللہ ہی کے لئے ہیں اور اسی کے شایان شان ہیں ”الحمداللہ“ کی یہی خصوصیت ہے۔ ➌ ان میں اللہ تعالیٰ کی توحید اور اس…

Continue Readingپسندیدہ کلمات

لاحولا ولاقوۃ الا باللہ کا بیان

تحریر : فضیلۃ الشیخ حافظ عبدالستار الحماد حفظ اللہ لاحولا ولاقوۃ الا باللہ کا بیان أَلاَ أَدُلُّكَ عَلَى كَلِمَةٍ هِيَ كَنْزٌ مِنْ كُنُوزِ الْجَنَّةِ، لاَ حَوْلَ وَلاَ قُوَّةَ إِلاَّ بِاللَّهِ ”کیا میں تمہیں ایک ایسا کلمہ نہ بتاؤں جو جنت کے خزانوں میں سے ایک خزانہ ہے، وہ ل اَ حَوْلَ وَلاَ قُوَّةَ إِلاَّ بِاللَّهِ ہے۔ “ [ صحيح بخاري، 6384] فوائد : کلمہ ل اَ حَوْلَ وَلاَ قُوَّةَ إِلاَّ بِاللَّهِ کا معنی یہ ہے گناہوں سے باز رہنے کا حیلہ اور اچھے کام کرنے کی طاقت صرف اللہ تعالیٰ کی توفیق سے ہے، اس کا مطلب یہ ہے کہ انسان اللہ کی تقدیر کے سامنے انتہائی بےبس اور لاچار ہے اس کی توفیق کے علاوہ نہ تو کوئی گناہوں سے محفوظ رہ سکتا ہے اور نہ ہی اس میں کوئی اچھا کام کرنے کی ہمت آ سکتی ہے۔ اس کلمہ میں توحید…

Continue Readingلاحولا ولاقوۃ الا باللہ کا بیان

استعاذہ کیا ہے

تحریر : فضیلۃ الشیخ حافظ عبدالستار الحماد حفظ اللہ استعاذہ کیا ہے ‏اللَّهُمَّ إِنِّي أَعُوذُ بِكَ مِنْ شَرِّ مَا عَمِلْتُ وَمِنْ شَرِّ مَا لَمْ أَعْمَلْ ”‏اے اللہ ! میں تیری پناہ چاہتا ہوں ان اعمال کے شر سے جو میں نے کئے ہیں اور ان اعمال کے شر سے جو میں نے نہیں کئے۔ “ [صحيح مسلم، 2716] فوائد: حضرت فروہ بن نوفل اشجعی کہتے ہیں کہ میں نے ام المومنین حضرت عائشہ رضی اللہ عنہا سے پوچھا : رسول اللہ صلی اللہ علیہ وسلم کیا دعا مانگا کرتے تھے تو انہوں نے مذکورہ دعا کا حوالہ دیا۔ ان میں انسان اللہ تعالیٰ سے دعا کرتا ہے کہ اے اللہ! مجھے برے اعمال سے بچنے کی توفیق دے اور میں جو کر چکا ہوں ان کی نحوست اور عذاب سے مجھے محفوظ رکھ اور آئندہ کے لئے بھی مجھے ان سے دور رکھ…

Continue Readingاستعاذہ کیا ہے

نماز کے بعد مسنون اذکار

تحریر : فضیلۃ الشیخ حافظ عبدالستار الحماد حفظ اللہ نماز کے بعد مسنون اذکار كُنْتُ أَعْرِفُ انْقِضَاءَ صَلاَةِ النَّبِيِّ صلى الله عليه وسلم بِالتَّكْبِيرِ ”میں رسول اللہ صلی اللہ علیہ وسلم کی نماز کو پورا ہونا اللہ اکبر کی آواز سے پہچانتا تھا۔“ [ صحيح بخاري، 842] فوائد : حضرت ابن عباس رضی اللہ عنہما اپنی خالہ حضرت میمونہ رضی اللہ عنہا کے گھر میں ہوتے اور صغر سنی کی وجہ سے نماز کے لئے مسجد میں نہ جاتے۔ ان کا بیان ہے کہ جب رسول اللہ صلی اللہ علیہ وسلم با آواز بلند ”اللہ اکبر“ کہتے تو مجھے پتہ چل جاتا کہ اب آپ کی نماز پوری ہو چکی ہے اور آپ نے سلام پھیر دیا ہے اس سے معلوم ہوا کہ سلام کے بعد اونچی آواز سے اللہ اکبر کہنا مسنون عمل ہے۔ پھر تین مرتبہ استغفر اللہ پڑھ کر یہ…

Continue Readingنماز کے بعد مسنون اذکار

قرآن کا سیکھنا سکھانا

تحریر : فضیلۃ الشیخ حافظ عبدالستار الحماد حفظ اللہ قرآن کا سیکھنا سکھانا خَيْرُكُمْ مَنْ تَعَلَّمَ الْقُرْآنَ وَعَلَّمَهُ ”تم میں سے بہتر وہ شخص ہے جو قرآن سیکھے اور دوسروں کو سکھائے۔ “ [‏صحيح البخاري، 5027‏‏ ] فوائد: راوی حدیث حضرت سعد بن عبیدہ کہتے ہیں کہ حضرت ابوعبدالرحمن سلمیٰ نے حضرت عثمان رضی اللہ عنہ کے زمانہ خلافت سے لے کر حجاج بن یوسف کے دور حکومت تک لوگوں کو قرآن کی تعلیم دی اور وہ کہا کرتے تھے کہ یہی حدیث ہے جس نے مجھے اس جگہ تعلیم القرآن کے لیے بٹھا رکھا ہے۔ جب قرآن مجید کلام اللہ ہونے کی حیثیت سے دوسرے تمام کلاموں سے بہتر اور افضل ہے اس کا سیکھنا سکھانا بھی دوسرے کاموں سے افضل اور بہتر ہو گا یہ اس صورت میں ہے جب قرآن کا پڑھنا پڑھانا خلوص اور حسن نیت پر مبنی ہوں۔…

Continue Readingقرآن کا سیکھنا سکھانا

فضائل درود

تحریر : فضیلۃ الشیخ حافظ عبدالستار الحماد حفظ اللہ فضائل درود مَنْ صَلَّى عَلَىَّ صَلاَةً صَلَّى اللَّهُ عَلَيْهِ بِهَا عَشْرًا ”جو شخص مجھ پر ایک مرتبہ درود بھیجتا ہے تو اس پر اللہ تعالیٰ اس کے بدلے دس رحمتیں نازل کرتا ہے۔ “ [المسلم، الصلاة، 384] فوائد : اس حدیث کی تکمیل یہ ہے کہ رسول اللہ صلی اللہ علیہ وسلم نے فرمایا : جب تم موذن کو اذان دیتے ہوئے سنو تو اسی طرح کہو جس طرح وہ کہتا ہے پھر تم مجھ پر درود بھیجو، بلاشبہ وہ شخص جو مجھ پر ایک مرتبہ درود بھیجتا ہے تو اس پر اللہ تعالیٰ اس کے عوض دس رحمتیں نازل کرتا ہے۔ رسول اللہ صلی اللہ علیہ وسلم پر دورد بھیجنا ہمارے ذمے آپ کا حق ہے ارشاد باری تعالیٰ ہے: ”بےشک اللہ تعالیٰ اور اس کے فرشتے نبی کریم صلی اللہ علیہ وسلم…

Continue Readingفضائل درود

End of content

No more pages to load